0

کروڑوں کے اثاثے بنانے پر سپرنٹنڈنٹ کمشنر آفس کوئٹہ کو 5 سال قید کی سزا

کوئٹہ کی احتساب عدالت نے سپرنٹنڈنٹ کمشنر آفس طلعت اسحاق کو ناجائز اثاثے بنانے کا جرم ثابت ہونے پر 5 سال قید کی سزا سنادی۔

احتساب عدالت کوئٹہ کے جج منور احمد شاہوانی نے کیس کی سماعت کی۔ عدالت نے کروڑوں روپے مالیت کے ناجائز اثاثے بنانے کا جرم ثابت ہونے پر کمشنر آفس کے سپرنٹنڈنٹ طلعت اسحاق کو 5 سال قید اور ساڑھے 4 کروڑ روپے جرمانہ کی سزا سنائی۔

عدالت نے کروڑوں روپے مالیت کی جائیدادوں اور گاڑیوں سمیت تمام اثاثہ جات ضبط کرنے کا بھی حکم دیا۔

سرکاری تحویل میں لیے گئےاثاثوں میں ڈی ایچ اے لاہور کے دو بنگلے، دو فلیٹ، 4 پلاٹس، بحریہ ٹاؤن راولپنڈی کا ایک بنگلہ، کوئٹہ میں دو بنگلے، دو پلاٹ، بینک اکاؤنٹس میں موجود 2 کروڑ روپے، ڈیڑھ کروڑ روپے کے سیونگ سرٹیفکیٹ، 290 تولہ سونا، 26.4  ملین روپے کی فارن کرنسی، 14 ملین روپے کی جیولری، مرسیڈیز سمیت چار قیمتی گاڑیاں شامل ہیں۔

خیال رہے کہ ملزم نے اعتراف جرم کر تے ہوے پلی بارگین کی درخواست بھی دی تھی جسے ڈی جی نیب بلوچستان نے مسترد کر دیا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں