0

ام رباب چانڈیو کے اہلخانہ کے تہرے قتل کا مرکزی ملزم کشمور سے گرفتار

پولیس نے اُم رباب خاندان قتل کیس کے مرکزی ملزم مرتضیٰ چانڈیو کو کشمور سے گرفتار کرلیا۔

ترجمان سندھ پولیس کے مطابق گرفتار ملزم کا نام مرتضیٰ چانڈیو ہے جو سندھ سے فرار ہونے کی کوشش کر رہا تھا جس دوران گرفتار کیاگیا۔

ترجمان نے بتایا کہ گرفتار ملزم کے سر کی قیمت 10 لاکھ روپے مقرر تھی، اس سے قبل دو نامزد اور مرکزی ملزمان کو پولیس پہلے ہی گرفتار کرچکی ہے۔

ام رباب کے والد، بھائی اور چچا کو ملزمان نے دادو کی تحصیل مہڑ میں 2017 میں فائرنگ کر کے قتل کردیا تھا۔

اُدھر جیونیوز سے گفتگو کرتے ہوئے ام رباب نے بتایا کہ میرے اہلخانہ قتل کیس میں مرکزی ملزم کی گرفتاری پر مطمئن ہوں، سردار اور جاگیردار سمجھ لیں، وہ اب قانون سے نہیں بچ سکتے نہ ہی اپنے ہرکاروں کو بچا سکتے ہیں۔

ام رباب نے کہا کہ پولیس کو میرے گھر سے نکلنے سے پہلےتین سال کے دوران ایکشن لینا چاہیے تھا، سپریم کورٹ کے ایکشن لینے کے بعد پولیس نے مرکزی ملزم گرفتار کیا ہے اور مرکزی ملزم کی گرفتاری پاکستان کے عوام کی جیت ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں